Afifa Hazel // آئینہ

Published on :

میں دیکھ آئ تھی نم آنکھ میں وہ لال رنگ۔ میں دیکھ آئ تھی رنگین مزاج میں بے نیازی کا امتزاج۔ میں دیکھ آئ تھی خاموشی میں دبے، دہکے دہکے، لاوے ابلتے شور۔ میں دیکھ آئ تھی مسکان میں چھپے حسرتوں کے جلتے بجھتے دیپ۔ مگر کیوں؟ کیوں مجھے یہ […]

جنگ عشق // اريبہ سليم

Published on :

اک جنگ سی جاری ہے میرے اندر جینے کے لیے، سوچتی ہوں بھول جاؤ اُسے آگے بڑھنے کے لیے، ہر رات سینے میں جنگ کی تاریکی کا سماں ہوتا ہے، جب دل بول پڑتا ہے اُسکے حق کے لیے، چاہوں بھی تو اِس جنگ کو جیت نہیں سکتی، دل میرا […]

میں, محبت اور یہ جنگ// اريبہ سليم

Published on :

میری روح کا شگاف بڑھ رہا ہے، جیسے کوئ جسم کے اندر اُتر رہا ہے، اِس فساد میں کیا ڈھال رکھیں، جو میری ذات میں ہی ہو رہا ہے، قلب وفا کی جنگ میں جیتنا چاہے، اور دماغ انا کی جنگ جیت رہا ہے، اِس وفا و انا کی جنگ […]

مسا فتِ حیات – اسرا فرحاد

Published on :

کَبھی یُوں بھی ہو ہم ساتھ چلیں کَبھی بُھولے سے تم راہ بُھولو پھر اُن لمحوں کی سیر کریں جن لمحوں میں ہم جیتے تھے جب فکر سے خالی دنیا تھی جب ڈر کو بھی ڈر لگتا تھا اُس یاد کو پھر سے یاد کریں بے خوف ، زمانہ جھیلیں […]

یہ میرا گھر ہے -اریبہ سلیم

Published on :

یہ جگہ میری بنیاد ہے، بہترین یادوں کا امتزاج ہے، میرے صبح و شام کی نوید ہے، یہ میرا گھر ہے، اسکی ہر دیوار سے جُڑی اک کہانی ہے، جو میرے بچپن کی یاد دہانی ہے، جہاں میں نے کھیلا ہے، یہ میرا گھر ہے، اسکی ہر چیز میری پسند کے مطابق ہے، اسکے ہر کونے کو میں نے خود سنوارا ہے، کبھی اسکی دیواروں پر اپنا غصہ بھے نکالا ہے، یہ میرا گھر ہے، مجھ سے کتنا بھی دور ہے، ہر پل یادوں میں موجود ہے، اس جگہ میں بہت سُکون ہے، یہ میرا گھر ہے۔ +30

Afifa Hazel-مرہم

Published on :

جب یادیں خون رلاتی ہیں تب دل میں سوز اترتا ہے پھر ساون خوب مہکتا ہے اور تن من یوں سلگتا ہے اک چنگاری اک شعلہ سا اک آہ چلے ہے دریا سا میرے سائیں کا یوں کرم ہوا میرا حسن جل کر راکھ ہوا جب زخم پہ ہریالی چھا […]